دو نمازوں کا جمع کرنا جائز ہے یا نہیں؟
سوال
دو نمازوں کا جمع کرنا جائز ہے یا نہیں؟
جواب
اللہ عزوجل نے اپنے نبی کریم علیہ افضل الصلوۃ و تسلیم کے ارشادات سے نماز فجر کا ایک خاص وقت جدا گانا مقرر فرمایا ہے کہ نہ اس سے پہلے نماز کی صحت نہ اس کے بعد تاخیر کی اجازت ظہرین عرفہ (عرفہ کی ظہر اور عصر)عشائین مزدلفہ( مزدلفہ کی مغرب عشاء) کے سوا دو نمازوں کا قصداً ایک وقت میں جمع کرنا سفرا حضرا ہرگز کسی طرح جائز نہیں قران عظیم واحادیث دصحاح سید المرسلین صلی اللہ تعالی علیہ وسلم اس کی ممانعت پر شاہد عدل ہے
READ MORE  Fatawa Rizvia jild 05, Fatwa 297

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to Top