جو امام نماز پڑھانے پر نوکر ہے اس کی اقتداء کرنا کیسا؟
:سوال
جو امام نماز پڑھانے پر نوکر ہے اس کی اقتداء کی جائے یا جماعت ترک کی جائے؟
:جواب
قطعاً اقتداء کی جائے اس عذر پر ترک جماعت ہرگز جائز نہیں ، متقدمین کے نزدیک جو اُجرت لے کر امامت کرنے والے کے پیچھے نماز میں کراہت تھی اس بنا پر کہ اُن کے نزدیک امامت پر اجرت لینا نا جائز تھاوہ بھی ایسی نہ تھی جس باعث ترک جماعت کا حکم دیا جائے ، اب کہ فتوای جواز اجرت پر ہے تو وہ کراہت بھی اندر ہی۔
READ MORE  جمعہ کے بعد احتیاطی ظہر پڑھنے کی ضرورت ہے یا نہیں؟

About The Author

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to Top