عید کی نماز پڑھنے کے بعد پھر امام بن کر نماز پڑھانا کیسا؟
:سوال
زید نے ایک مسجد میں جو شہر میں واقع ہے مقتدی بن کر نماز عید الفطر پڑھی ، اس کے بعد زید عید گاہ کو گیا اور وہاں بکر امام تھا، اُس سے نماز پڑھاتے وقت اخیر رکعت میں تکبیریں چھوٹ گئی تھیں جس سے نماز فاسد ہو گئی تب زید نے دوبارہ امام بن کر نماز عید الفطر پڑھائی حالانکہ وہ نماز مقتدی کی حالت میں پڑھ کر گیا تھا، ایسی حالت میں زید کو نماز پڑھانا چاہئے تھا یا نہیں؟
:جواب
زید کو امامت ہرگز جائز نہ تھی، جن لوگوں نے اُس کے پیچھے نماز پڑھی ان کی نماز باطل ہوئی، اُن میں جو نا واقف تھے ان کی نماز رہ جانے کا وبال بھی زید کے سر رہا۔
مزید پڑھیں:عید کی نماز سے پہلے درزی کا کام کرنا کیسا؟
READ MORE  Fatawa Rizvia jild 03, Fatwa 105

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to Top