اگر چاول سے صدقہ فطر دیں، تو کتنی مقدار دینی پڑے گی؟
:سوال
اگر چاول سے صدقہ فطر دیں، تو کتنی مقدار دینی پڑے گی ؟ ہمارے ہاں گندم اور جو غذا کے طور پر استعمال نہیں کیا جاتا۔
: جواب
شرع مطہر نے یہ صدقہ صرف چار چیزوں سے مقرر فرمائی ہے: گیہوں ( گندم)، جوخرما( کھجور )، زبیب (کشمش)۔ ان کے سوا پانچویں کوئی چیز چاول ہو یا دھان یا کپڑا وہ اُنھی میں ایک کی قیمت کے اعتبار سے جائز ہے ورنہ نہیں۔ گیہوں سے نیم (نصف ) صاع واجب ہے ۔۔ اور جَو سے اس کا دونا ( دو گنا )، گیہوں یا جَو کا وہاں کم پیدا ہونا یا غذا میں مستعمل نہ ہونا یا دیہات میں نہ ملنا چاول کو بے لحاظ قیمت صرف صاع یا نیم صاع دے دینے کے قابل نہیں کر سکتا، بلکہ واجب ہے کہ اپنے ضلع میں گیہوں نیم صارع یا جَو ، ایک صاع کی جو قیمت ہو اسی قدر دام اتنے دام کے چاول یا اور چیز ادا کر دیں۔
ایک اور مقام پر فرماتے ہیں: چاول کی قیمت کے اعتبار سے دئے جائیں گے خواہ وزن میں نصف صاع ہوں یا زیادہ یا کم یعنی نصف صاع گندم کی قیمت میں جتنے چاول آئیں اتنے دئے جائیں گے۔
READ MORE  عورت کا حج کو جانا درست ہے یا نہیں؟

About The Author

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to Top