اکثر لوگ یہ کہتے ہیں کہ جس نے نماز کو چھوڑا اس میں اور مشرک میں کچھ فرق نہیں؟
سوال
اکثر لوگ یہ کہتے ہیں کہ جس نے نماز کو چھوڑا اس میں اور مشرک میں کچھ فرق نہیں؟
جواب
بلا شبہ حدیث میں آیا ہے کہ ہم میں اور مشرکوں میں فرق نماز کا ہے اس میں شک نہیں کہ جو نماز کا تارک ہے وہ مشرکوں کے فعل میں ان کا شریک ہے پھر اگر دل سے بھی نماز کو فرض نہ کیا جانے یا ہلکا سمجھے جب تو سچا مشرک پورا کافر ہے ورنہ اس کا یہ کام کافر وں مشرکوں کا سا ہے اگرچہ وہ حقیقتہ کافر مشرک نہ ٹھہرے
READ MORE  Fatawa Rizvia jild 06, Fatwa 635

About The Author

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to Top