باامر عذر ہاتھ کانوں تک نہ جائے تو اسکے پیچھے نماز کا حکم
:سوال
ایک شخص کا دہنا ہاتھ ٹوٹ گیا ہے اس وجہ سے نیت باندھتے وقت اس کا ہاتھ کانوں تک نہیں پہنچتا کہ اس کو مس کرے، اس سبب سے بعض لوگ اس کے پیچھے اقتداء کرنے سے انکار کرتے ہیں ، اس کا کیا حکم ہے؟
:جواب
خیال مذکور غلط ہے اُس کے پیچھے جو از نماز میں کلام نہیں ، ہاں غایت یہ ہے کہ اسکا غیر اولی ہوتا ہے وہ بھی اس حالت میں کہ یہ شخص تمام حاضرین سے علم مسائل نماز و طہارت میں زیادت نہ رکھتا ہو ورنہ یہی احق واولی ہے۔
READ MORE  آذان کے بعد درود پڑھنے کا کیا حکم ہے؟

About The Author

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to Top